صحت

امریکی حفظان صحت کے اہلکار ذہنی تناؤ کا شکار ہونے لگے

امریکی حفظان صحت کے اہلکار ذہنی تناؤ کا شکار ہونے لگے

اٹلانٹا: بیماریوں کے کنٹرول اور روک تھام کے امریکی ادارے (سی ڈی سی) کے محققین نے ملک بھر میں حفظان صحت کے کارکنان کی ذہنی حالت کے حوالے سے وارننگ جاری کی ہے۔2018 اور 2022 کے درمیان ملک گیر سروے کے اعداد و شمار کا استعمال کرتے ہوئے ادارے کی ایک نئی رپورٹ میں پتا چلا ہے کہ تقریباً نصف ہیلتھ ورکرز نے 2022 میں ذہنی، جسمانی اور جذباتی تناؤ کی اطلاع دی۔رپورٹ میں اس بات کا بھی انکشاف ہوا کہ حفظان صحت کے کارکنام کی جانب سے کام پر ہراساں کیے جانے کی رپورٹیں بھی پہلے سے دگنی ہیں۔حال ہی جاری ہونے والی رپورٹ میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ صحت کے کارکنوں کو دیگر صنعتوں کے ملازمین کے مقابلے میں دماغی صحت کے بدترین نتائج کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔یہ نتائج امریکی تاریخ میں ہیلتھ کیئر ورکرز کی سب سے بڑی ہڑتال کے بعد سامنے آئے ہیں جس میں 75,000 ہیلتھ کیئر ملازمین نے پانچ ریاستوں اور ڈسٹرکٹ آف کولمبیا میں واک آؤٹ کے دوران حد درجہ جسمانی ذہنی بڑھتا تناؤ اور عملے کی دائمی کمی کا حوالہ دیا۔

Leave feedback about this

  • Quality
  • Price
  • Service

PROS

+
Add Field

CONS

+
Add Field
Choose Image