پاکستان نے آئی سی سی کو 6 ایونٹس کی میزبانی کی پیشکش کردی

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) محمد وسیم خان کا کہنا ہے کہ پاکستان انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کے تمام بڑے ایونٹس کی میزبانی کےلیے کوششیں کررہا ہے۔ ایک انٹرویو میں وسیم خان کا کہنا تھا کہ آئی سی سی کے 6 ایونٹس کی میزبانی کے لیے کوششیں شروع کردی ہیں جن میں ورلڈ کپ، انڈر 19ورلڈ کپ اور ویمنز ورلڈ کپ سمیت دیگر ٹورنامنٹس شامل ہیں، آئی سی سی ستمبر، اکتوبر 2021ء تک ان ایونٹس کی میزبانی کا فیصلہ کرے گا۔

وسیم خان کا مزید کہنا تھا کہ پی سی نے آئی سی سی کو 6 ایونٹس کی میزبانی کی پیش کش کردی ہے ، امید ہے کہ ستمبر یا اکتوبر 2021ء تک ان ایونٹس کے میزبانوں کا اعلان کردیا جائے گا۔ پی سی بی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر کا کہنا تھا کہ 2023ء سے2027ء کے فیوچر ٹورز پروگرام سائیکل میں جنوبی افریقہ، انگلینڈ، آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ جیسی ٹیموں کے ساتھ زیادہ سے زیادہ سیریز رکھنے کی کوشش کریں گے، کوشش کریں گے کہ اب اپنی ہر ٹیسٹ سیریز میں کم از کم 3 میچز کھیلیں ،سینئرز کے ساتھ شاہینز، انڈر 19 اور انڈر 16 ٹیموں کیلئے بھی دو طرفہ سیریز کروائی جائیں گی ۔

وسیم خان نے کہا کہ بھارتی کرکٹ بورڈ کی مجبوریوں کو دیکھتے ہوئے فی الحال ایف ٹی پی میں روایتی حریف کے خلاف سیریز کے لیے کوئی ونڈو نہیں رکھی ہے ، بائیو سیکیور پروٹوکولز کے معاملے پر نیوزی لینڈ اور جنوبی افریقا میں ہونے والے تجربات سے سبق سیکھ کر اپنے انتظامات کو مزید بہتر بنانے کی کوشش کریں گے ۔

ان کا کہنا تھا کہ 2021ء پاکستان کرکٹ کیلئے مصروفیت کا سال ہوگا جس میں انگلینڈ، جنوبی افریقہ، نیوزی لینڈ اور زمبابوے کی ٹیمیں پاکستان آئیں گی ۔ وسیم خان کا مزید کہنا تھا کہ 2022ء میں آسٹریلیا اور انگلینڈ کی ٹیمیں بھی مکمل سیریز کھیلنے کے لیے پاکستان کا دورہ کریں گی ۔