‘ریپ’ الزامات کی تفتیش کے لیے انوراگ کشیپ تھانے طلب

بھارتی ریاست مہاراشٹر کے شہر ممبئی کی پولیس نے بولی وڈ فلم ساز و اداکار انوراگ کشیپ کو ‘ریپ’ الزامات کی تفتیش کے لیے طلب کرلیا۔

بھارتی اخبار  کے مطابق ممبئی کے ورسووا تھانے نے فلم ساز انوراگ کشیپ کو تفتیش کے لیے تھانے میں پیش ہوکر بیان ریکارڈ کروانے کے لیے سمن جاری کردیا۔

سمن میں انوراگ کشیپ کو یکم اکتوبر کی صبح ساڑھے گیارے بجے تک تھانے پہنچ کر بیان ریکارڈ کروانے کی ہدایت کی گئی۔

انوراگ کشیپ کو پولیس نے ایسے وقت میں سمن جاری کیا ہے جب کہ ایک روز قبل ہی ان پر الزام لگانے والی اداکارہ پائل گھوش نے اپنے وکلا کے ساتھ ورسووا تھانے پر احتجاج کرتے ہوئے پولیس پر الزام لگایا تھا کہ وہ ان کی شکایت پر سست روی سے کام کر رہی ہے‎

مقدمہ دائر کروائے جانے کے 4 دن تک پولیس کی جانب سے انوراگ کشیپ کو تفتیش کے لیے نہ بلائے جانے پر 29 ستمبر کو پائل گھوش نے پولیس تھانے میں احتجاج کیا تھا۔

اداکارہ کے احتجاج کے ایک دن بعد ہی پولیس نے انوراگ کشیپ کو تھانے پیش ہوکر بیان ریکارڈ کرانے کا حکم دے دیا۔

حیران کن بات یہ ہے کہ پائل گھوش نے ابتدائی طور پر 19 ستمبر کو انوراگ کشیپ پر جنسی استحصال کا الزام لگایا تھا، تاہم انہوں نے فلم ساز کے خلاف ‘ریپ’ کا مقدمہ دائر کروایا ہے۔