‘ہر جگہ عورت عورت نہیں ہونا چاہیے، مرد کی اپنی جگہ ہے’

پاکستان ڈرامہ انڈسٹری کی مقبول اداکارہ ثروت گیلانی کا کہنا ہے کہ میں یہ نہیں کہتی کہ میں ایک فیمینسٹ ہوں، مجھے لگتا ہے کہ مرد کی اپنی جگہ ہے میں یہ نہیں کہوں گی عورت عورت ہر جگہ ہو۔

اداکارہ ثروت گیلانی کا کہنا تھا کہ مجھے محسوس ہوتا ہے کہ ایک خاص وقت میں مرد کی ضرورت بھی پڑتی ہے، چاہے خاتون کتنی بھی آزاد ہو ، مجھے لگتا ہے کہ میں آزاد عورت ہوں لیکن میرا خیال ہے کہ مجھے بھی ضرورت پڑ سکتی ہے ایک ایسے شخص کی جو کہے کہ میں آپ کا خیال رکھوں گا، وہی جس پر میں انحصار کر سکوں۔

اداکارہ کے مطابق پاکستان میں خاص طور پر جب ہم فیمینزم کی بات کریں تو لوگوں کو لگتا ہے کہ اس میں مرد کا کوئی ہاتھ نہیں ہے جبکہ بہت سے مرد فیمینزم کو آگے لے جانے میں مدد کرتے ہیں کیونکہ وہ اپنی عورتوں کو تعاون فراہم کرتے ہیں اور ان کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں۔

ثروت گیلانی کا کہنا تھا کہ میرے خیال میں فیمینزم متوازن خیال ہے لیکن لوگوں کو لگتا ہے کہ فیمینزم صرف عورتوں کے لیے ہے لیکن ایسا نہیں ہے، اس کا مردوں سے بھی اس کا تعلق ہے کہ مرد کس طرح برتاؤ کر رہا ہے، کس طرح تبدیلی لا رہا ہے لہٰذا ہم فیمینزم کو غلط سمجھ رہے ہیں۔