اداکارہ کنگنا رناوت نے ہریتھک روشن کو ’’روتو‘‘ قرار دیدیا

ممبئی: اداکارہ کنگنا رناوت نے ہریتھک روشن کو روتو قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ ایک افیئر کے لیے کب تک آنسو بہاتا رہے گا۔ بالی ووڈ اداکارہ کنگنا رناوت اکثر متنازع بیانات کی وجہ سے خبروں کی زینت بنی رہتی ہیں، کبھی وہ پاکستان کے خلاف زہر اگلتی ہیں تو کبھی مودی سرکار کے خلاف ہی بیانات دیکر سب کی توجہ اپنی جانب مبذول کرواتی ہیں۔ حال ہی میں انہوں نے بھارت کے احتجاجی کسانوں سے متعلق متنازع ٹوئٹ کرکے خود کو مشکل میں ڈال دیا تھا۔

دوسری جانب کنگنا رناوت کے ہریتھک روشن کیساتھ تنازع سے کون واقف نہیں جس میں انہوں نے اداکار کو اپنا سابق عاشق قرار دیتے ہوئے ان پر سنگین الزامات عائد کیے تھے اور ہریتھک نے 2016 میں اداکارہ کے خلاف ہتک عزت کا دعویٰ دائر کرتے ہوئے قانونی نوٹس بھیجا تھا جس میں اب پیش رفت سامنے آئی ہے۔

اداکار ہریتھک روشن کے وکلا کی جانب سے درخواست کے بعد 2016 میں ہریتھک روشن کی جانب سے دائر کی جانے والی ایف آئی آر سائبر سیل سے کرائم برانچ منتقل کردی گئی ہے۔ ایف آئی آر میں اداکار نے دعویٰ کیا تھا کہ 14-2013 کے درمیان انہیں کنگنا رناوت کی آئی ڈی سی سیکڑوں ای میل موصول ہوئی تھیں۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ادکارہ کنگنا رناوت نے اس خبر پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ ہریتھک روشن کا رونا دوبارہ شروع ہوگیا، ہمارے بریک اپ اور ہریتھک کی طلاق کو کئی سال گزرنے کے باوجود وہ آج بھی اسی جگہ کھڑا ہے جب کہ میں حوصلہ کرکے اپنی زندگی میں کچھ امید پیدا کرتے ہوئے آگے بڑھ چکی ہوں تو اس نے پھر سے یہ ڈرامہ شروع کردیا۔ انہوں نے ہریتھک کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ایک چھوٹے سے افیئر کے لیے کب تک روئے گا۔

واضح رہے اداکارہ کنگنا رناوت خود یہ اعتراف کرچکی ہیں ہریتھک روشن سے تنازع کی وجہ سے ان کی شخصیت پر منفی اثرات مرتب ہوئے اور ان کے ساتھ قانونی جنگ نے ان کے پیشے اور خواہشات کو ٹھیس پہنچائی۔