حکومت کا نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن کے قیام کا فیصلہ

موٹر وے سانحے کے بعد وزیر اعظم عمران خان کے حکم پر مشکلات میں گھرے افراد کی فوری مدد کے لیے نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن کے قیام پرکام شروع کردیا گیا ہے۔

ریڈیو پاکستان کی  کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے اس حوالے سے پی ایم ڈیلیوری یونٹ کو اہم ٹاسک سونپ دیا ہے اور ہدایت کی ہے کہ 2 ماہ میں یہ مکمل کیا جائے جس کے بعد نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن پر کام کا آغاز کر دیا گیا ہے۔

نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن کے لیے الگ نظام تشکیل دیا جائے گا، اس نظام کے تحت کسی بھی ایمرجنسی کی صورتحال میں پورے ملک کے لیے ایک ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبر ہو گا اور اس صورت میں عوام کو ایک مخصوص نمبر میسر ہو گا۔‎

وزیر اعظم آفس کے مطابق ملک کے تمام ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبرز کو نئے نظام سے منسلک کیا جائے گا اور نیشنل ایمرجنسی ہیلپ لائن نمبر ٹول فری ہو گا۔