موٹر وے جیسے کیسسز کی تشہیر ہی نہیںایکشن ہو نا چاہیئے،ایس کے نیازی

ضلعی سطح پر ایسے انتظامات ہوں کہ جیسے رپورٹ ہو فوری ایکشن ہو اور ان کا مہنیوں کی جگہ دنوں میں فیصلہ ہونا چاہئے
ان واقعات میں جو ملزمان قبل از گرفتاری ضمانت کرا لیتے ہیں، چیف جسٹس سے در خوا ست ہے اس پر از خود نوٹس لیں
اسلام آباد(روزنیوزرپورٹ)پاکستان گروپ آف نیوز پیپرز کے چیف ایڈیٹر اور روزنیوز کے چیئرمین ایس کے نیازی نے کہا ہے عمران خان کی والدہ کو کینسر ہوا اس غم کو بھلانے کیلئے عمران خان نے کینسر ہسپتال بنایا، میں نے بھی ہیومن رائٹس پر بہت کام کیا ، مسنگ پرسن کا بھی میرا کیس تھا، 22.20سال سے میں سماجی کام کر رہا ہوں ، قانون موجود ہیں، احکامات ہیں، لیکن قانون پر عملد رآمد نہیںہوتا، امین انصاری نے ایک مقصد کیلئے زندگی وقف کر دی ، گزشتہ چیزوں کو رو رہے ہیں، اور کوئی کام نہیں ہو رہا ہے ، زینب ایکٹ میں تمام سزائیں موجود ہیں، عمل کون کرائے گا، حکومت اور اپوزیشن الزام تراشیاں کر رہی ہے ، امین انصاری کے مسئلہ پر حکومت کی کوئی توجہ نہیں ، ہمارے ذاتی مفادات ، امن و امان پر توجہ نہ دینا ، اس سے حالات خراب ہو رہے ہیں، اس طرح کا واقعہ رپورٹ ہو تو فوری کارروائی ہونی چاہئے ، ایسے کیسز کی تشہیر سے بھی حالات مزید خراب ہو تے ہیں، ایسے واقعات میڈیا پر آنے ہی نہیں چاہئے ، پروگرام سچی بات میں گفتگو کر تے ہو ئے کہا کہ ضلعی سطح پر ایسے انتظامات ہوں کہ جیسیرپورٹ ہو فوری ایکشن ہو اور ان کا مہنیوں کی جگہ دنوں میں فیصلہ ہونا چاہئے ، مدینہ کی ریاست کا کہتے ہیں، وہاں ایکشن ہوتا ہے ، جب واقعات ہوتے ہیں، تو ہم بات کرتے ہیں، مگر پھر ہم بھول جاتے ہیں، یہ ہمارا لمحہ فکریہ ہے ، جو ملزمان قبل از گرفتاری ضمانت کرا لیتے ہیں، سپریم کورٹ ، چیف جسٹس اس پر از خود نوٹس لیں، حکومت بھی اس حوالے سے تحقیقات کرے ، یہ حکمرانوں ، اجلاسوں کا کیا کریں گے ، عوام کا خیال کریں، بے سہارا عوام کو پوچھیں ، مجرم کا پتہ چل جائے تو اسے سزا ضروری ملنی چاہئے ، انشاء اللہ وقت آئے گا ، جب پاکستان میں درنگی کا خاتمہ ہو گا۔