معرکہ دوارکا : یوم بحریہ آج ملی جوش و جذبے سے منایا جارہا ہے

کراچی : جنگ ستمبر 1965 میں ہونے والے معرکہ دوارکا کی یاد میں آج یوم بحریہ ملی جوش و جذبے سے منایا جا رہا ہے، پاک بحریہ نے دشمن کا غرور خاک میں ملا دیا تھا۔

یوم بحریہ کے موقع پر پاک بحریہ کے سربراہ ایڈمرل محمد امجد خان نیازی نے اپنے پیغام میں کہا کہ 8 ستمبر یوم بحریہ ہماری قومی تاریخ کا عظیم الشان اور یادگار دن ہے۔ انہوں نے کہا کہ آپریشن سومنات میں جہازوں نے بھارتی بندرگاہ دوارکا پر حملہ کیا تھا۔ پاک بحریہ نے بھارتی ریڈار اسٹیشن تباہ کیا اور دشمن کا غرور خاک میں ملا دیا تھا۔

نیول چیف نے کہا کہ پاک بحریہ کی واحد آبدوز غازی نے پوری بھارتی نیوی کو بندرگاہ میں مقید رکھا اور پاکستان نیوی خطے میں ایک مضبوط بحری قوت کے طور پر پہچانی جاتی ہے۔ سربراہ پاک بحریہ نے مزید کہا کہ پاک بحریہ عالمی پانیوں میں امن و استحکام کو یقینی بنا رہی ہے اور آج کے دن خون کے آخری قطرے تک ثابت قدم رہنے کا عہد کرتے ہیں۔

ملک بھر میں یوم بحریہ آج منایا جا رہا ہے
یاد رہے کہ آپریشن سومنات‘‘ 65 کی جنگ میں بھارت کی شکست کا دوسرا نام ہے، ’’بھارتی حملےغیر مؤثر بنانے کیلئے’’دوارکا ریڈاراسٹیشن‘‘ تباہ کرنا ضروری تھا۔ آبدوزغازی کا نشانہ بنانے کیلئے بھارتی بحریہ کو ہاربر سے نکالنا ضروری تھا، ہر قسم کے مواصلاتی رابطے کی مکمل ممانعت نے آپریشن کو مزید کٹھن بنا دیا تھا۔

آپریشن کے دوران جہازوں کی رہنمائی صرف سمتوں کے ذریعے کی جا رہی تھی، نصف شب تمام جہاز دوارکا کے ساحل کے قریب آچکے تھے۔ رات12بج کر 26 منٹ پر فائر کا حکم ملا اور جہازوں کی توپیں آگ اگلنے لگیں، پے در پے حملوں سے ریڈار اسٹیشن بمعہ عملے کے مکمل طور پر تباہ ہو چکا تھا۔ دوارکا ریڈار اسٹیشن کی تباہی سے بھارتی فضائی حملے یکلخت ختم ہوگئے، پاک بحریہ نے دشمن کو اس کے اپنے پانیوں میں شکست فاش دی۔