سحری سے شام 6 بجے تک کاروبارکی اجازت، ہفتہ اتوار مارکیٹیں بند رہیں گی: این سی او سی

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے کورونا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے رمضان المبارک کے دوران سحری سے شام 6 بجے تک کاروبار کھولنے کی اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ وفاقی وزیر اور سربراہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر اسد عمر کی زیر صدرات این سی او سی کا خصوصی اجلاس ہوا جس میں ملک بھر میں آج سے کورونا ایس او پیز پر عمل درآمد کروانے کا فیصلہ کیا گیا۔

این سی او سی اعلامیے کے مطابق اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ کورونا کے خطرے کو مدنظر رکھ کر سخت ایس او پیز کے ساتھ وسیع لاک ڈاؤن لگایا جائے گا، مارکیٹیں صبح سحری سے شام 6 بجے تک کھلی رہیں گی جبکہ ملک بھر میں ہفتہ، اتوار کو کاروبار بند رہے گا۔

یہ بھی پڑھیں اسلام آباد، ایک روز میں 10 سال تک کے مزید 102 بچے کورونا کا شکار

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ افطار سے رات 12 بجے تک ہوٹلوں کے باہر کھانے کی اجازت ہو گی، بین الصوبائی ٹرانسپورٹ ہفتے میں دو دن بند رہےگی جبکہ سینما گھر اور مزارات مکمل طور پر بند رہیں گے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ اندرون شہر ٹرانسپورٹ 50 فیصد مسافروں کے ساتھ چلے گی جبکہ ریلوے کو 70 فیصد مسافروں کے ساتھ چلایا جائےگا، رمضان میں رش سے بچنے کے لیے اضافی ٹرینیں چلائی جائیں گی۔

این سی او سی کے مطابق کھیلوں اور ثقافتی میلوں سمیت دیگر تقریبات پر مکمل پابندی ہو گی اور ایس او پیز پر این سی او سی کا جائزہ اجلاس 10 رمضان المبارک کو ہو گا۔