‘تحریک لبیک سے متعلق معاہدے کو پارلیمنٹ میں جلد پیش کریں گے’

اسلام آباد : وزیرمذہبی امورنورالحق قادری کا کہنا ہے کہ تحریک لبیک سے متعلق معاہدے کو پارلیمنٹ میں پیش کریں گے، پارلیمان جو فیصلہ کرے گی وہ سب کو قبول ہوگا۔

وفاقی وزیرمذہبی امورنورالحق قادری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تحریک لبیک سےمتعلق معاہدےکوپارلیمنٹ میں پیش کریں گے، ہم نے ان سے وعدہ کیا تھا یہ معاملہ پارلیمنٹ میں آئے گا، پارلیمان جوفیصلہ کرےگی وہ سب کو قبول ہوگا۔نورالحق قادری کا کہنا تھا کہ اس معاملےپرپارلیمان کی تمام جماعتوں سےبات کریں گے، کوشش کررہے ہیں جلد یہ معاملہ پارلیمنٹ میں آئے۔

وفاقی وزیر نے مزید کہا کہ حکومت انتخابی اصلاحات کےلیےسنجیدہ ہے، انتخابی اصلاحات درست سمت پرلانےکےلئےکام کر رہےہیں، آئین نے ہی پاکستان کو بچایا ہوا ہے، آئین پاکستان کی حفاظت کرنا ہم سب کی ذمہ داری ہے۔

یاد رہے وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اجلاس میں تحریک لبیک کے مطالبات پر مشتمل قرارداد عید سے پہلے پارلیمنٹ میں پیش کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ تحریک لبیک سےمعاہدے پر عملدرآمد کے لیےکمیٹی دیگر جماعتوں سے بھی بات کرے گی۔

خیال رہے گذشتہ سال نومبر میں حکومت اور تحریک لبیک کے درمیان 4نکاتی معدہدہ طے پایا تھا ، جس کے تحت حکومت فرانس کے سفیر کو دو سے تین ماہ میں ملک بدر کرے گی، فرانسیسی سفیر کوپارلیمنٹ سےفیصلہ سازی کے ذریعے ملک بدر کیا جائے گا۔معاہدے میں کہا گیا تھا کہ پاکستانی حکومت فرانس میں سفیر تعینات نہیں کرےگی اور فرانس کی مصنوعات کا سرکاری سطح پر بائیکاٹ کیا جائے گا۔