ویکسین کی فراہمی میں کمی ، ڈیمانڈ اور سپلائی کا توازن بگڑ گیا،ابرار الحق

اسلام آباد (روزنیوزرپورٹ)ہلال احمر کے چیئرمین ابرار الحق نے روزنیوز کے پروگرام ’’ سچی بات ‘‘ میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پہلے کرونا کے حوالے سے لوگوں میں آگاہی نہیں تھی وہ ویکسین کے حوالے سے ابہام کا شکار تھے ، اب لوگوں کو پتہ چلا ہے تیسری لہر بھی خطرناک ہے لہذا لوگوں نے زیادہ تعداد میں کرونا وائرس کی ویکسین لگوانا شروع کر دی ہے ، اس وجہ سے ڈیمانڈ اور سپلائی کا توازن بگڑ گیا، اس وجہ سے ویکسین میں کمی آئی ہے ، انہوں نے کہا کہ جب ویکسین نہیں بنی تھی ہم نے اس وقت شروع مچایا کہ ویکسین تیار ہونے کے بعد تمام بڑے اس کو لے جائیں گے اور چھوٹے ملک محروم رہ جائیں گے ، ابرار الحق نے کہا میں اس حوالے سے سوال اٹھایا اور پاکستان کو اس کا نائب صدر بنوا دیا تھا، ابھی ملک میں پانچ لاکھ ویکسین کی خوراکیں اور آرہی ہیں ، ڈیمانڈ اور سپلائی میں جو فرق پیدا ہوا ہے اسے دور کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ، مناسب ہو گا کہ اس سلسلے میں ہلال احمر کے نمائندے کی بھی خدمات لی جائیں ، ہم نے ساری زندگی رفاعی کاموں میں گزاری ہے ، اگر ہماری خدمات لی جاتی ہیں ِ تو اس سے بہت زیادہ فوائد حاصل ہونگے ۔