بچے کو زیادتی کے بعد قتل کرکے نہر میں ڈالنے والا ملزم خود بھی اسی نہر میں ڈوب کر ہلاک

فیصل آباد میں 11 سالہ بچےکو زیادتی کے بعد قتل کرنے والا ملزم پولیس حراست سے فرار ہوتے ہوئے سیم نہر میں ڈوب کر ہلاک ہوگیا۔ پولیس کےمطابق ماموں کانجن کےعلاقے میں چار روز قبل 11 سالہ اسد علی کو گھرکے باہر سے اغوا کرکے زیادتی کا نشانہ بنایا گیا تھا اور قتل کرکےسیم نہر میں لاش پھینک دی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں کراچی: گھریلو پریشانیوں سے تنگ شخص نے خودسوزی کر لی

پولیس نے شبے کی بنیاد پرمحلے دار ذیشان کو حراست میں لےکرتفتیش کی تو ملزم نے بچے کو اغوا کرنے اور زیادتی کے بعد قتل کرنےکا اعتراف کرلیا اور بتایا کہ اس نے بچے کو اغوا کیا پھر زیادتی کرکے قتل کیا اور لاش نہر میں پھینکی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم ذیشان کو آلہ قتل کی برآمدگی کےلیےسیم نہر پرلےجایا گیا جہاں اس نے بھاگنے کی کوشش کی اور اسی سیم نہر میں چھلانگ لگادی جس سے ملزم ڈوب کر ہلاک ہوگیا۔