کورونا کے منفی اثرات کے باوجود پاکستان میں غیرملکی سرمایہ کاری میں 151 فیصد اضافہ

کراچی : پاکستان میں براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری کا حجم ایک سو اکاون فیصد اضافے سے اکتیس کروڑ چوہتر لاکھ ڈالر تک پہنچ گیا، سب سے زیادہ 22 کروڑ 77 لاکھ ڈالر کی براہ راست سرمایہ کاری چین سے آئی۔

حکومتی پالیسیز اور بہتر معاشی اشاریے کے باعث پاکستان پر غیرملکی سرمایہ کاروں کا اعتماد بحال ہونے لگا، اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا کہنا ہے کہ اکتوبر کے مہینے میں ملک میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری میں گزشتہ سال کے مقابلے ایک سو اکیاون فیصد کا ریکارڈ اضافہ ہوا۔ جس کے بعد اکتوبر 2020 میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا حجم اکتیس کروڑ چوہتر لاکھ ڈالر تک پہنچ گیا جو گزشتہ سال اکتوبر میں بارہ کروڑ پینسٹھ لاکھ ڈالر تھا، اکتوبر میں چین کی جانب سے بائیس کروڑ ستاسی لاکھ ڈالر کی سب سے زیادہ براہ راست سرمایہ کاری کی گئی۔ مرکزی بینک کے مطابق رواں مالی سال کے ابتدائی چار ماہ میں براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری میں نو فیصد اضافہ ہوا، جولائی سے اکتوبر تک براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری تہتر کروڑ اکتیس لاکھ ڈالر تک پہنچ گئی۔