friend daughter sucking sideways big rod.videos porno
desi porn
pornoxxx

وزیراعلیٰ کا انتخاب: وزیر اعظم نے پارٹی ہدایت کیخلاف ووٹ ڈال نیوالے اراکین کو خبردار کردیا

وزیر اعظم عمران خان نے آج پنجاب اسمبلی میں ہونے وزیراعلیٰ کے انتخاب میں پارٹی ہدایت کے خلاف ووٹ ڈالنے والے پی ٹی آئی ارکان کو خبردار کردیا۔ عمران خان نے ٹوئٹر پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کے تمام اراکین صوبائی اسمبلی میں آج پنجاب میں وزارتِ اعلیٰ کے انتخاب میں چوہدری پرویز الہٰی کو ووٹ کا دیا جانا یقینی بنائیں۔

انہوں نے پارٹی ارکان کو خبر دار کیا کہ رائے شماری سے غیرحاضر رہنے یا جماعتی ہدایات کے خلاف ووٹ ڈالنے والے رکن کو کڑی انضباطی کارروائی کا سامنا ہوگا اور اسے نااہل قرار دیا جائے گا۔ واضح رہے کہ پنجاب اسمبلی میں آج نئے وزیراعلیٰ کا انتخاب ہوگا جس کیلئے اجلاس دن ساڑھےگیارہ بجے شروع ہوگا۔

وزیراعلیٰ کے انتخاب کیلئے درکار ووٹ پنجاب اسمبلی میں وزیر اعلیٰ کے انتخاب کیلئے 371 ارکان میں سے 186 ارکان کی سادہ اکثریت درکار ہوگی۔ اسمبلی میں کسی سنگل پارٹی کو سادہ اکثریت حاصل نہیں، تحریک انصاف کے 183 ووٹ ضرور ہیں لیکن انکے بعض ارکان ساتھ چھوڑ چکےہیں ، اسی طرح ن لیگ کو بھی 5 ارکان کا مسئلہ درپیش ہے۔

نمبر زگیم کےمطابق تحریک انصاف سے ترین گروپ کے 13 ارکان ، علیم خان گروپ کے 9 ارکان ، دوسابق وزراء اسد کھوکھر ، اعجاز عالم ، نذیر چوہان اور ایک رکن راجہ صغیر نے حمزہ شہباز کی حمایت کی یقین دہانی کرائی جس کے بعد پی ٹی آئی کے ارکان کی تعداد 158 رہ گئی ہے۔

ق لیگ کے 10 ووٹ ہیں جبکہ ن لیگ کے 6 ارکان پرویز الٰہی سے اور پیلز پارٹی کا ایک رکن عثمان بزدار سے مل چکے ہیں۔ اس طرح پرویز الہٰی کے پاس مجموعی طور پر 172 ارکان بنتے ہیں۔ 6 منحرف ارکان کے بعد ن لیگ کے 159 ووٹ ہیں، پیپلز پارٹی کے 6، آزاد 2اور ترین گروپ کے 13 ارکان ہیں ، علیم خان نے 9 ارکان سے حمایت کا اعلان کیا ، اس طرح حمزہ شہباز کی حمایت میں مجموعی طورپر 193ووٹ بنتےہیں۔

یہاں چودھری نثار کے ووٹ سمیت 3 آزاد اور ایک راہ حق پارٹی کا ووٹ اہمیت اختیار کرگیا ہے دونوں جانب سے مزید حمایت حاصل کرنے کے دعوے بھی جاری ہیں۔

spanish flamenca dancer rides black cock.sex aunty
https://www.motphim.cc/
prmovies teen dildo wet blonde stunner does it on the hood of car.