میاں صاحب نے دھواں دار تقریر نہیں کی مسائل بیان کیے ہیں، شاہد خاقان

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہےمیاں صاحب نے دھواں دار تقریر نہیں کی، مسائل بیان کیے ہیں، یہ حکومت کیسے آئی سب کو پتا چل گیا ہے۔ 

احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کی اے پی سی میں نوازشریف  نے دھواں دار تقریر نہیں کی، مسائل بیان کیے ہیں، یہ ہائبرڈ حکومت ہے جو ناکام ہوچکی ہے، حکومت کیسے آئی ہے سب کو پتہ چل گیا ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ نیب کورٹ میں آج بھی پیشی ہوئی، نیب نے ملک کو مفلوج کردیا ہے اور لوگوں کی زندگیا ں تباہ کررہا ہے، سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ کی ججمنٹ کے بعد نیب کی کارکردگی گھل گئی،  نیب صرف سیاستدانوں کے خلاف کیسز بنارہا ہے،  ہمارا مطالبہ ہے کہ کمرہ عدالت میں کیمرہ لگا کر عوام کو دکھایا جائے۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ پارلیمنٹ میں بدنیتی پر مبنی بل پاس کرائے گئے جس کا فیٹف سے کوئی تعلق نہیں، ہماری روایات کچھ قانون سے ہٹ کر بن گئی ہیں، نیب میں پہلے ہی اینٹی منی لانڈرنگ کاقانون موجود ہے،  بل میں حکومت کسی کا بھی کمپیوٹر ہیک کرسکتی ہے۔

ایل این جی کیس کی سماعت کمپیوٹر کی خرابی کے باعث ملتوی

اس سے قبل کراچی کی احتساب عدالت میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی اور دیگر کے خلاف ریفرنس کی سماعت ہوئی، تاہم عدالت میں موجود کمپیوٹر خراب ہوگیا، عدالتی کمپیوٹر میں ٹیکنیکل مسائل کے باعث گواہ کا بیان ریکارڈ نہ ہوسکا اور عدالت نے کیس کی سماعت 12 اکتوبر تک ملتوی کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ گواہ کا بیان آئندہ سماعت پر ریکارڈ کیا جائے گا۔