اقتدار سنبھالنے کے بعد طالبان پر پہلا حملہ ،2 افراد ہلاک اور 19زخمی

کابل (حسنات بلوچ)ایک ماہ پہلے افغانستان کا اقتدار سنبھالنے کے بعد طالبان پر پہلا حملہ کیا گیا ہے۔ پے در پے ہونے والے دھماکوں میں کم از کم دو افراد ہلاک اور انیس زخمی ہو گئے ہیں۔

جلال آباد میں طالبان کی گاڑیوں کو نشانہ بنایا گیا، عینی شاہدین کے مطابق افغانستان کے مشرقی صوبہ ننگرہار میں پے در پے تین دھماکے ہوئے۔ جن گاڑیوں کو نشانہ بنایا گیا، ان پر طالبان سوار تھے۔ طبی حکام نے ہلاکتوں اور زخمیوں کی تعداد کی تصدیق کی ہے۔

ابھی تک کسی گروہ نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔ لیکن اس صوبے میں داعش سے ہمدردری رکھنے والے عسکری گروہ سرگرم ہیں اور انہیں طالبان کا مخالف سمجھا جاتا ہے۔ ماضی میں بھی داعش اور طالبان کے عسکریت پسندوں کے مابین جھڑپیں ہوتی رہی ہیں۔