این اے 75 ڈسکہ میں دوبارہ پولنگ روکنے کا حکم

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے این اے 75 ڈسکہ کے 10 اپریل کا الیکشن ملتوی کرنے کا حکم دے دیا۔ سپریم کورٹ میں کیس کی سماعت کے دوران مسلم لیگ (ن) کی امیدوار نوشین افتخار کے وکیل سلمان اکرم راجا نے دلائل دیتے ہوئے عدالت میں ضلع ڈسکہ کا مکمل نقشہ پیش کردیا۔

اس پر عدالت نے کہا کہ آپ نے ایک دن میں بہت زیادہ تیاری کرلی۔ سلمان اکرم راجہ نے اپنے دلائل میں کہا کہ ڈسکہ شہر میں 76 پولنگ اسٹیشنز ہیں، شہر کے76 میں سے 34 پولنگ اسٹیشنز سے شکایات آئیں، الیکشن کمیشن نے34 پولنگ اسٹیشنزکی نشاندہی کی اور 20 پریزائیڈنگ افسربھی غائب ہوئے۔

جسٹس عمر عطا بندیال نے کہا کہ یہ بھی بتایا گیا ہے کہ10 پولنگ اسٹیشنز پرپولنگ کافی دیرمعطل رہی، سوال یہ ہے کہ پولنگ کے دن کون اور کیوں یہ مسائل پیدا کرتا رہا؟ کیا ایک امیدوار طاقتور تھا اس لیے دوسرے نے یہ حرکتیں کروائیں؟

بعد ازاں عدالت نے این اے 75 ڈسکہ میں 10 اپریل کو ہونے والی پولنگ ملتوی کرنے کا حکم دے دیا۔ نوٹ: اس خبر میں مزید تفصیلات شامل کی جارہی ہیں