سعودی عرب میں منشیات اسمگلنگ کی بڑی کارروائیاں ناکام بنا دی گئیں

سعودی عرب میں منشیات فروشوں کے خلاف بڑا کریک ڈاؤن کیا گیا ہے۔ جس کے نتیجے میں سینکڑوں افرا د گرفتار کر لیے گئے ہیں اور مجموعی طور پر ہزاروں کلو گرام منشیات بھی پکڑی گئی ہیں۔ سعودی عرب میں انسداد منشیات فورسز اور دیگر سیکیورٹی اداروں نے ایک مشترکہ کارروائی کے دوران جازان کے علاقے میں 34 ٹن قات اور 488 کلو گرام چرس قبضے میں لے کر منشیات کی اسمگلنگ کی کوشش ناکام بنا دی۔

سعودی عرب کے بارڈ سیکیورٹی فورسز کے ترجمان لیفٹیننٹ کرنل مسفر القرینی نے بتایا کہ سیکیورٹی فورسز نے 488 کلو گرام چرس اور 34 ٹن اور 485 کلو گرام نشہ آور بوٹی قات ضبط کی۔ اس کے علاوہ نجران کے علاقے الجوف سے 971676 ایمفٹامن نامی نشہ آور گولیاں قبضے میں لے لیں۔

ترجمان نے بتایا کہ منشیات کی اسمگلنگ میں ملوث 121 ملزمان کو گرفتار کیا تھا۔ ان میں سے 91 کی گرفتاری جازان سے عمل میں لائی گئی۔

نجران سے 17، عسیر سے 10 اور الجوف سے 3 ملزمان کو پکڑا گیا۔ان کا کہنا تھا کہ مملکت کے سیکیورٹی ادارے ہمہ وقت منشیات کے دھندے کی روک تھام کے لیے کام کررہے ہیں اور وہ پورے عزم کے ساتھ چوکس ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ منشیات کے اسمگلروں کی کوششیں تواتر کے ساتھ ناکام بنائی جا رہی ہیں اور سماج دشمن عناصر کو گرفتار کرکے انہیں قانون کے حوالے کیاجا رہا ہے۔

واضح رہے کہسعودی عرب دُنیا بھر کے مسلمانوں کے لیے مقدس ترین مقام ہے۔یہاں پر شراب نوشی اور دیگر منشیات استعمال کرنے اور تیار کرنے پر سر قلم کر دیا جاتا ہے، تاہم اتنی سخت سزا کے باوجود مملکت میں کچھ لوگ اس طرح کے غیر شرعی کاموں سے باز نہیں آتے۔ سعودی عرب میں شراب بنانے کی ایک بھٹی پکڑی گئی ہے جہاں پر 4 ہزار لیٹر تیار شراب بھی برآمد ہوئی ہے۔

یہ کارروائی عسیر پولیس کی جانب سے ایک دُور دراز وادی میں کی گئی ، جہاں لوگوں کا آنا جانا کم رہتا
ہے، جس کا فائدہ اُٹھا کر کچھ لوگوں نے یہاں پر شراب تیار کرنے کی بڑی بھٹی بنا رکھی تھی۔ عسیر پولیس کے مطابق اس بھٹی پر ادارہ امر بالمعروف و نہی عن المنکر کے ساتھ مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے چھاپہ مارا گیا۔ جہاں بھٹی میں موجود ڈرموں سے 4 ہزار لیٹر شراب برآمد ہوئی، جسے تلف کر دیا گیا ہے۔ جبکہ بھٹی کو توڑ پھوڑ دیا گیا ہے اور اس جگہ کو متعلقہ ادارے کے سپرد کر دیا گیا ہے۔