2 پاکستانیوں نے’انسپائرنگ بزنس ٹرانسفارمیشن’ گلوبل ایوارڈز جیت لیے

کراچی: ورلڈ سی آئی اوز 200سمٹ 2020 میں دو پاکستانیوں نے "انسپائرنگ بزنس ٹرانسفارمیشن” کے گلوبل ایوارڈز جیت لیے۔

ا یونٹ کے اعلامیے کے مطابق سمٹ کے 2020 ایڈیشن کے لیے ایونٹ سے قبل کئی نامزدگیاں موصول ہوئیں جن کا جائزہ ایک عالمی جیوری نے لیا اور 200 صف اول کے سی آئی اوز کو شارٹ لسٹ کیا جنہیں ڈی ایکس ایوارڈ ز2020 کے لیے نامزد کیا گیا۔

مجموعی طور پر 26 ممالک ورلڈ سی آئی او 200 سمٹ کا حصہ ہیں اور اس ایونٹ میں پاکستان نے دوسری مرتبہ حصہ لیا ہے۔ ورلڈ سی آئی اوز 200 سمٹ کے پاکستان ایڈیشن کے پارٹنر ‘لوکو سروسز ‘نے پاکستان کے چیف انفارمیشن آفیسرز (سی آئی اوز) کی حوصلہ افزائی اور انہیں عالمی سطح پر پہنچا دلوانے کے لیے یہ آغاز کیاہے۔

اعلامیے کے مطابق ڈی ایکس ایوارڈز 2020 جیتنے والے 20 سی آئی اوز میں دو پاکستانی ملر اینڈ فلپ پاکستان کے جنرل منیجر انفارمیشن ٹیکنالوجی افتخار عارف اورآغاز خان یونیورسٹیز اینڈ اسپتال کے چیف انفارمیشن آفیسر رسل وائدرز شامل ہیں۔

شارٹ لسٹ ہونے والے دنیا کےصف اول کے 200 سی آئی اوز میں مجموعی طور پر 21 پاکستانی شارٹ لسٹ ہوئے جن کے نام خصوصی سالانہ کتاب ‘دا بک آف ٹائینز (BOTS)میں شامل کیا گیا۔

1۔سید ابو طفیل

2۔سید عبد القادر

3۔ محمد قاسم بھام

4۔ رضا عسکری

5۔ رسل وائدرز

6۔وقار نقوی

7۔ خواجہ خرم

8۔زید عمر فاروقی

9۔ شکیل اخطر

10۔ظفر صبیح

11۔عاصم محمود

12۔وجاہت خان

13۔ ایم عثمان اکرم

14۔فیصل حسین

15۔ افتخارعارف

16۔ عبد اللہ رحیم احمد

17۔ فیصل محمود

18۔ فیصل انور

19۔مشہود رحمن

20۔ فیضان مصطفی

21۔ صاحبزادہ علی محمود

سمٹ کے میڈیا پارٹنر جیو نیوز اور اسپورٹ پارٹنر PSEB نے پاکستان ایڈیشن کو کامیاب بنانے میں کلیدی کردار ادار کیا۔