معروف روہنگیا کارکن کا بنگلہ دیش میں گولیاں مار کے قتل کر دیا

(حسنات بلوچ)روہنگیا مسلمانوں کے لیے کام کرنے والے ایک معروف کارکن محب اللہ کو بنگلہ دیش کے کاکس بازار میں گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا ہے۔
بدھ کی شام اپنے دفتر کے باہر دیگر پناہ گزینوں سے بات چیت کر رہے تھے جب ایک نامعلوم شخص نے ان پر کم سے کم تین فائر کیے۔
اقوام متحدہ کے ایک ترجمان کا کہنا ہے کہ محب اللہ روہنگیا مسلمانوں کے لیے اپنی فلاحی سرگرمیوں کے سبب بین الاقومی سطح پر معروف تھے۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل کی جنوبی ایشیا کے لیے ڈائریکٹر میناکشی گانگولی نے بھی محب اللہ کی موت پر گہرے افسوس کا اظہار کیا ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ کمیونٹی کے لیے ان کی آواز بہت اہم تھی اور ان کے قتل سے اسے غیر تلافی نقصان پہنچا ہے۔