امریکا کا افغانستان میں ڈرون حملہ، کابل دھماکے کے منصوبہ ساز کی ہلاکت کا دعویٰ

کابل ائیرپورٹ پر خودکش دھماکے کے بعد امریکا نے ایک بار پھر افغانستان پر فضائی حملہ کر کے ائیرپورٹ حملے کے منصوبہ ساز کی ہلاکت کا دعویٰ کیا ہے۔

امریکی سینٹرل کمانڈ کے ترجمان کا کہنا ہے فورسز نے افغان صوبے ننگرہار میں داعش جنگجوؤں کے ٹھکانے پر ڈرون حملہ کیا، حملے میں داعش خراسان سے تعلق رکھنے والا کابل ائیرپورٹ حملے کا منصوبہ ساز مارا گیا، حملے میں کسی عام شہری کا جانی نقصان نہیں ہوا۔

خیال رہے کہ تین روز قبل کابل ائیرپورٹ پر ہونے والے دھماکے میں اب تک 13 امریکی فوجیوں سمیت 170 افراد کی ہلاکت کی تصدیق ہو چکی ہے جبکہ 100 سے زائد زخمی اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔
ابل ائیرپورٹ پر حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کرتے ہوئے کہا تھا کہ حملہ آور امریکی فورسز کا سکیورٹی حصار توڑتے ہوئے 50 میٹر اندر گیا اور خود کو بارودی مواد کی مدد سے اڑا دیا۔

امریکا کے صدر جوبائیڈن نے کابل ائیر پورٹ پر خودکش حملے کا ذمہ دار داعش خراسان کو قرار دیتے ہوئے اس کی قیادت پر حملوں کا حکم دیا تھا۔