بھارت: مسلسل پانچویں روز کورونا کے ریکارڈ ساڑھے تین لاکھ سے زائد کیسز

بھارت میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے تقریباً 3 لاکھ 53 ہزار کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جو ایک روز کے دوران کورونا کیسز سامنے آنے کا ایک نیا عالمی ریکارڈ ہے جب کہ بھارت میں اس طرح کورونا کے کل کیسز کی تعداد ایک کروڑ 70 لاکھ سے تجاوز کرگئی ہے۔

بھارت میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 2800 سے زائد ہلاکتیں بھی ہوئی ہیں جس سے ہلاکتوں کی تعداد ایک لاکھ 95 ہزار سے زائد ہوگئی ہے۔بھارت میں کورونا کی بدترین صورتحال کے پیش نظر ٹیکنالوجی حب بنگلورو شہر میں 14 روز کے لیے لاک ڈاؤن لگادیا گیا ہے جس کا اطلاق 27 اپریل سے ہوگا۔

ایک کروڑ 20 لاکھ آبادی پر مشتمل بنگلورو شہر میں اتوار کے روز 20 ہزار سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے جو دوسری لہر کے دوران ایک روز میں رپورٹ ہونے والے سب سے زیادہ کیسز ہیں۔
یہ بھی پڑھیں: بھارت کے مالدار افراد نجی طیاروں کے ذریعے ملک چھوڑ گئے

بھارت میں کورونا کی وجہ سے کرکٹ لیگ آئی پی ایل بھی بری طرح متاثر ہوئی ہے اور غیر ملکی کھلاڑی لیگ چھوڑ رہے ہیں جب کہ حال ہی میں دو آسٹریلین کھلاڑیوں نے آئی پی ایل کو خیرباد کہا ہے۔

بھارتی دارالحکومت نئی دلی کے وزیراعلیٰ نے 18 سال سے زائد عمر کے افراد کے لیے مفت ویکسی نیشن کا اعلان کیا ہے۔

بھارت میں کورونا کے سبب بنگلادیش نے بھارت کے ساتھ اپنا بارڈر بند کردیا ہے تاہم اس دوران گڈز ٹرانسپورٹ جاری رہے گی جب کہ بھارت میں پھنسے بنگلادیشی شہریوں کو بارڈر پرمخصوص پوائنٹس کے ذریعے وطن واپسی کی اجازت دی جائے گی جو اپنا 72 گھنٹے کا منفی ٹیسٹ کا نتیجہ دکھا کر وطن واپس آسکیں گے۔

اس کے علاوہ بنگلادیش نے بھارت کے ساتھ 14 اپریل سے معطل فضائی آپریشن میں بھی مزید توسیع کردی ہے۔

نیدرلینڈ نے بھی بھارت سے آنے والی پروازوں پر پابندی عائد کردی ہے جس کے تحت یکم مئی تک بھارت سے آنے والے کسی مسافر کو نیدر لینڈ میں داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔