اسپتالوں کو آکسیجن فراہمی روکنے والوں کو پھانسی دی جائیگی: دہلی ہائیکورٹ

بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی کی ہائیکورٹ کا کہنا ہے کہ کورونا کی موجودہ صورتحال میں اسپتالوں کو آکسیجن کی فراہمی روکنے والوں کو پھانسی دی جائے گی۔ بھارت میں کورونا کی وبا انتہائی خطرناک صورتحال اختیار کر چکی ہے، روزانہ کی بنیاد پر لاکھوں کیسز اور ہزاروں اموات سامنے آ رہی ہیں۔

بھارت کے اسپتال مریضوں سے بھر گئے ہیں جبکہ چتا (لاشیں) جلانے کے لیے شمشان گھاٹوں میں جگہ بھی کم پڑ گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں بھارت: کورونا کے مزید ساڑھے 3 لاکھ کیسز، علی گڑھ یونیورسٹی کے 10 پروفیسر جاں بحق

ایسی صورتحال میں نئی دہلی ہائیکورٹ کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ وبا کی لہر نہیں سونامی ہے اور اس صورتحال میں اسپتالوں کو آکسیجن کی فراہمی روکنے والوں کو پھانسی دی جائے گی۔ دوسری جانب بھارت نے ملک میں خراب صورتحال کے باعث کورونا ویکسین کی برآمد پر بھی پابندی عائد کر دی ہے۔