امریکا پھر امیگریشن بحران کی زد میں! ریپبلکن اراکان کی صدر بائیڈن پر تنقید

واشنگٹن : امریکا میں ایک اور امیگریشن بحران سر اٹھانے لگا، میکسیکو سے امریکا غیر قانونی داخلے کے واقعات میں 71 فیصد اضافہ ہوگیا۔

امریکا میں غیر قانونی داخلے کی وجہ سے امیگریشن بحران مچا ہوا تھا جو قابو کرنے کےلیے سابق صدر ٹرمپ نے سخت پابندیا عائد کی تھیں۔

صدر بائیڈن کے اقتدار سنبھالتے ہی ملک میں دوبارہ امیگریشن بحران سر اٹھانے لگا ہے، گزشتہ ماہ ایک لاکھ 72 ہزار افرادکو غیر قانون داخلے پر حراست میں لیا گیا جس کے بعد رواں سال پکڑے جانے والے افراد کی تعداد ساڑھے پانچ لاکھ سے زائد ہوگئی۔

ریپبلکن ارکا ن کانگریس نے امیگریشن بحڑان کا ذمہ دار صدر بائیڈن کو قرار دیا ہے، انہوں نے کہا کہ بائیڈن کی نرم پالیسیوں کی وجہ سے سرحڈ پر لوگ جمع ہیں۔ریپبلکن اراکین کانگرنس کا کہنا ہے کہ گزشتہ ماہ 18 ہزار سے زائد بچے غیر قانون طور پر داخل ہوئے۔