سعودی عرب نے عمرہ زائرین کو بڑی خوشخبری سنادی

ریاض: سعودی عرب نے رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں عمرے کی زیارت حاصل کرنے والے افراد کو بڑی خوش خبری سنادی ہے۔

عاجل ویب سائٹ کے مطابق وزارت حج سے ایک زائر نے استفسار کیا تھا کہ رمضان میں عمرے کے لیے کرونا ویکسین سرٹیفکیٹ ضروری ہوگا؟ کئی لوگ اس کا دعوی کر رہے ہیں، حقیقت کیا ہے؟

جس پر وزارت حج و عمرہ نے ٹوئٹر پر جواب دیتے ہوئے کہا کہ اب تک عمرہ کے لیے کرونا ویکسین کی شرط نہیں ہے، رمضان میں زائرین کو ویکسین کے بغیر عمرےکی اجازت ہوگی۔

وزارت حج و عمرہ نے اس سے قبل کہا تھا کہ رمضان کے دوران عمرے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں، اعتمرنا ایپ کے ذریعے اجازت نامے استقبالیہ سینٹرز پر چیک کیے جائیں گے جبکہ وزارت صحت کی جانب سے جاری کردہ کرونا ایس او پیز پر عمل درآمد بھی سختی کے ساتھ کرایا جائے گا۔

اس سے قبل سعودی وزارت حج نے ایک سرکلر جاری کیا تھا جس میں رمضان کے آغاز سے قبل حج وعمرے کی خدمات سے متعلق تمام کارکنوں کو کرونا ویکسین لگوانے کی ہدایت کی گئی تھی۔

سرکلر میں کہا گیا تھا کہ جو کارکنان ویکسین نہیں لگوائیں گے انہیں ہر ہفتے پی سی آر منفی ٹیسٹ کی رپورٹ پیش کرنا ہو گی اور ٹیسٹ کی فیس متعلقہ ادارے کے ذمے ہوگی۔

وزارت حج وعمرہ کا کہنا تھا کہ وزارت صحت کی ہدایات کے مطابق صرف وہ سعودی شہری جن کی عمریں سے 18 سے 70 برس تک درمیان ہیں انہیں عمرے کی اجازت ہے۔

دوسری جانب سعودی عرب میں چند روز کے دوران کرونا کے نئے کیسز میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے، گذشتہ چوبیس گھنٹوں کےدوران سعودی عرب میں 585کروناکیسزرپورٹ ہوئے جوکہ چھ ماہ بعد کی سب سے بلند ترین سطح ہے۔