بھارت میں خاتون سے 17 افراد کی اجتماعی زیادتی

ممبئی: بھارتی ریاست جھاڑ کھنڈ کے شہر دمکا میں قبائلی خاتون سے اجتماعی زیادتی کا مقدمہ 17 ملزمان کے خلاف درج کرلیا گیا۔ 35 سالہ خاتون نے تھانہ مفصل میں ایف آئی آر درج کرائی کہ اپنے شوہر اور بچوں کے ہمراہ مقامی بازار سے واپس آرہی تھی کہ شام کے وقت کچھ ملزمان نے اسے روکا اور شوہر و بچوں کو یرغمال بناکر سنسان جگہ لے گئے جہاں باری باری اسے زیادتی کا نشانہ بنایا۔

متاثرہ خاتون نے مقدمے میں 1 شخص رام موہلی کو نامزد کیا ہے جبکہ 16 نامعلوم افراد شامل ہیں۔ رام موہلی کا تعلق خاتون کے والدین کے گاؤں سے ہے۔ خاتون دھان کی فصل کی کٹائی میں مدد کے لیے اپنے والدین کے گھر بھی گئی تھی۔
پولیس نے کیس درج کرکے خاتون کا طبی معائنہ کرایا ہے جس کی رپورٹ کی روشنی میں مزید کارروائی کی جائے گی اور تاحال کوئی گرفتاری نہیں کی گئی۔