قطر میں غیر ملکیوں کو جائیداد خریدنے کے بدلے زبردست پیشکش

دوحہ (نیوزڈیسک)قطر نے اپنی پراپرٹی مارکیٹ کو غیر ملکیوں کے لیے کھول دیا ہے،قطر کی حکومت گھر یا دکانیں خریدنے والے غیر ملکیوں کو عارضی یا مستقل قیام کی پیش کش کرے گی۔

اس پیش رفت کا مقصد صاحب ثروت غیر ملکیوں کو دوحہ میںجزیرہ لل ٹاورز یا لوسیل نیو سٹی میں سرمایہ کاری کی دعوت دینا ہے۔ جزیرہ لل ایک مصنوعی جزیرہ ہے۔اسی طرح شاپنگ مالز میں ریٹیلز اسٹورز خریدنے والے بھی اقامہ حاصل کرنے کے اہل ہوں گے۔یہ منصوبہ ضرورت سے زیادہ تعمیرات کے معاملے سے نمٹنے میں مددگار ثابت ہو سکتا ہے۔ زیادہ تعمیرات کے سبب ٹاوروں کی نصف تعداد خالی پڑی ہے اور 2016 سے اب تک ان کی قیمتوں میں تقریبا ایک تہائی کمی آ چکی ہے۔ماضی میں سرمایہ کاروں کو اقامہ حاصل کرنے کے لیے کسی قطری کمپنی یا شہری کی اسپانسر شپ کی ضرورت ہوتی تھی۔ تاہم اب دو لاکھ ڈالر قیمت کی جائیداد خریدنے پر جائیداد کی ملکیت رکھنے تک عارضی اقامہ باقی رہنے کی ضمانت دی گئی ہے۔ اسی طرح دس لاکھ ڈالر کی جائیداد خریدنے پر خریدار کو مستقل اقامہ اور دیگر سہولیات میسر ہوں گی۔ ان سہولیات میں مفت تعلیم اور صحت کی نگہداشت شامل ہے۔غیر ملکی حضرات اب قطر میں 25 علاقوں میں گھر تلاش کر سکتے ہیں۔ ان میں نو علاقے آزاد ملکیت کی بنیاد پر ہیں جب کہ بقیہ علاقے 99 سال کی لیز پر ہیں