مودی نے پاکستان اور چین کے ساتھ جنگ کیلئے تاریخ طے کرلی ہے، بی جے پی رہنما کا دعویٰ

نئی دہلی: بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ایک سینئر رہنما نے کہا ہے کہ نریندر مودی نے پاکستان اور چین کے ساتھ جنگ کے لیے تاریخ طے کرلی ہے۔

رپورٹ کے مطابق بھارتی نیوز ایجنسی پریس ٹرسٹ آف انڈیا رپورٹ کیا کہ بی جے پی کے ریاست اتر پردیش کے چیف سواتنترا دیو سنگھ نے پارٹی کارکنان کے اجلاس میں بتایا کہ نریندر مودی نے فیصلہ کرلیا ہے کہ بھارت کب پاکستان اور چین کے ساتھ جنگ کرے گا۔

بی جے پی رہنما کی جانب سے یہ بیان ایسے وقت پر سامنے آیا جب بھارت اور چین کے درمیان لائن آف ایکچول کنٹرول پر کشیدگی جاری ہے۔

مذکورہ رپورٹ جس کا این ڈی ٹی وی اور انڈین ایکسپریس سمیت متعدد نشریاتی اداروں حوالہ بھی دیا، اس کے مطابق بی جے پی رہنما نے اپنے اس دعویٰ کو سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کے آغاز اور آئین کے آرٹیکل 370 کے تحت مقبوضہ جموں اینڈ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے سے جوڑا۔

سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو بیان میں انہیں کہتے سنا گیا کہ ‘رام مندر اور آرٹیکل 370 کے فیصلوں کی طرح نریندر مودی فیصلہ کرچکے ہیں کہ پاکستان اور چین کے ساتھ جنگ کب کی جائے گی‘۔ سواتنترا دیو سنگھ نے یہ بات بی جے پی کے ایم ایل اے سنجے یادیو کے گھر پر منعقدہ تقریب میں کہی، جنہوں نے بعدازاں اس کی ویڈیو جاری کی۔ بی جے پی رہنما نے اپنے بیان میں سماج وادی پارٹی اور بہوجان پارٹی کے کارکنان کو ‘دہشت گردوں’ سے تشبیہ دی۔

ادھر اس حوالے سے جب مقامی ایم پی روندا کشواہا سے بی جے پی رہنما کے بیان سے پوچھا گیا تو ان کہنا تھا کہ یوپی میں بی جے پی کے صدر نے یہ بیان پارٹی کارکنان کا حوصلہ بڑھانے کے لیے دیا۔ پریس ٹرسٹ آف انڈیا کا کہنا تھا کہ سواتنترا دیو سنگھ کا رپورٹ کردہ بیان انڈیا کے مؤقف سے انحراف کرتا دکھائی دیتا ہے۔

علاوہ ازیں بھارت کے وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ نے اس بات کو دوہرایا کہ بھارت، چین کے ساتھ سرحدی کشیدگی ختم کرنا تاہم ساتھ ہی انہوں نے اس بات پر زور بھی دیا کہ وہ کسی کو ‘ایک انچ’ زمین بھی نہیں لینے دے گا۔