نومولود کو پہلا حفاظتی ٹیکہ نہ لگوانے پر پیدائشی سرٹیفکیٹ جاری نہ کرنے کا فیصلہ

لاہور: پنجاب حکومت نے نومولود کو پہلا حفاظتی انجیکشن نہ لگوانے پر پیدائشی سرٹیفکیٹ جاری نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اس سلسلے میں وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد کی طرف سے تمام سرکاری اسپتالوں کو احکامات جاری کیے گئے ہیں اور ایک نوٹیفکیشن بھی جاری کیا گیا ہے۔ نوٹیفکیشن کے مطابق اسپتال انتظامیہ حفاظتی ٹیکوں کے بعد ہی والدین کو برتھ سرٹیفکیٹ جاری کرے گی اور امیونائزیشن پراسیس کو مانیٹر کرنے کے لیے کمیٹی تشکیل دی گئی ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق کمیٹی 17 سے 25 نومبر تک ٹیچنگ اسپتالوں میں جا کر چیکنگ کرے گی جس میں گنگا رام، لیڈی ایچی سن، سروسز، جنرل اور شیخ زید اسپتال کو چیک کیا جائے گا۔