ممنوعہ فنڈنگ مقدمہ، الیکشن کمیشن کی پی ٹی آئی کو جواب کیلئے 2 ہفتے کی مہلت

ممنوعہ فنڈنگ مقدمہ، الیکشن کمیشن کی پی ٹی آئی کو جواب کیلئے 2 ہفتے کی مہلت

پاکستان تحریک انصاف ممنوعہ فنڈنگ مقدمے کی سماعت کے دوران الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو جواب جمع کرانے کے لیے 2 ہفتے کی اخری مہلت دے دی۔

الیکشن کمیشن میں پاکستان تحریک انصاف ممنوعہ فنڈنگ مقدمے کی سماعت چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجا کی سربراہی میں 4 رکنی بینچ نے کی، جس میں تحریک انصاف کی طرف سے شاہ خاور ایڈووکیٹ الیکشن کمیشن میں پیش ہوئے۔

شاہ خاور ایڈووکیٹ نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی کے غیر ملکی چیپٹرز سے معلومات مانگی ہیں، ان کی موصولی میں وقت لگے گا، گزشتہ سماعت پر ہم نے 4 ہفتوں کی مہلت مانگی تھی، جس پر چیف الیکشن کمشنر نے تبصرہ کیا کہ 2 ہفتے تو گزر گئے ہیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے پی ٹی آئی وکیل سے استفسار کرتے ہوئے کہا کہ پہلے اس مقدمے کی سماعت 8 سال چلی تھی، کیا اس مقدمے کو بھی 8 سال چلانا ہے؟

بعد ازاں الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو 2 ہفتوں کی مہلت دیتے ہوئے سماعت 19 ستمبر تک ملتوی کر دی، چیف الیکشن کمشنر نے ہدایت کی کہ آپ اپنے جواب کو پہلے جمع کروا دیں تاکہ اگلی سماعت پر دلائل شروع ہو سکیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

متعلقہ خبریں