رحیم یار خان: دریائے سندھ کے حفاظتی بند ٹوٹ گئے، سینکڑوں بستیاں اور فصلیں زیرآب

رحیم یار خان: دریائے سندھ کے حفاظتی بند ٹوٹ گئے، سینکڑوں بستیاں اور فصلیں زیرآب

رحیم یار خان (ویب ڈیسک): دریائے سندھ کے حفاظتی بند ٹوٹ گئے، سینکڑوں بستیاں اور فصلیں زیر آب آ گئیں، لوگ نقل مکانی کر کے حفاظتی مقامات پر پہنچ گئے، تاہم بچے، بڑے، اور خواتین مویشیوں کے ہمراہ کھلے آسمان تلے رہنے پر مجبور ہیں۔

تفصیلات کے مطابق دریائے سندھ میں سیلاب کے باعث بندھ ٹوٹنے سے کچہ محاذی، کچہ چوہان، بستی پہوڑ، ڈیرہ مشیر، بستی صمدانی، رسول پور زیر آب آ گئے، جبکہ سینکڑوں بستیاں فصلوں اور مکانات کو بھی شدید نقصان پہنچا ہے، انتظامیہ کی جانب سے امدادی کارروائیاں جاری ہیں۔

ان علاقوں کے سیلاب متاثرین نقل مکانی کرکے حفاظتی مقامات پر پہنچ گئے ہیں، تاہم یہ سب سیلاب متاثرین جن میں خواتین، بچے اور مال مویشی بھی شامل ہیں بے یار و مددگار کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبور ہیں، کچہ محازی، رسول پور اور بستی صمدانی میں تاحال امداد نہیں پہنچ سکی۔

اسسٹنٹ کمشنر رحیم یار خان کا کہنا ہے ریسکیو اور امدادی ٹیموں کے ہمراہ متاثرہ علاقوں کی نگرانی کی جا رہی ہے، سیلاب متاثرین کو ادویات اور خوراک فراہم کی جا رہی ہے، ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے تیار ہیں، جبکہ مسلسل بارشوں سے دریائے سندھ خطرناک صورتحال اختیار کر گیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

متعلقہ خبریں