’ملک کیلئے کھیلنا اولین ترجیح، اسی لئے دورہ انگلینڈ میں ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے پر رضامندی ظاہر کی‘

لاہور: (ویب ڈیسک) پاکستانی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ باؤلر وہاب ریاض (جنہوں نے چند عرصہ قبل ٹیسٹ کرکٹ آرام کی غرض سے چھوڑ دی تھی) کا کہنا ہے کہ پاکستان کے لئے کھیلنا میری اولین ترجیح ہے اسی لئے ٹیسٹ کرکٹ دوبارہ کھیلنے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔ٹیسٹ کرکٹ میں واپسی صرف دورہ انگلینڈ کے لیے ہے
ان خیالات کا اظہار فاسٹ باؤلر وہاب ریاض نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

یاد رہے کہ وہاب ریاض نے گزشتہ سال ستمبر میں ٹیسٹ کرکٹ سے غیرمعینہ مدت کے لیے کنارہ کشی اختیار کرنے کا فیصلہ کیا تھا تاہم پاکستانی ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق اور بولنگ کوچ وقاریونس ان کے فیصلے پر سخت برہم دکھائی دیے تھے اور ان کا کہنا تھا کہ اس فیصلے سے انھوں نے ٹیم کو سخت نقصان پہنچایا۔

انہوں نے کہا کہ ٹیسٹ میچز کھیلنے کے لئے تیار ہوں، انگلینڈ میں اچھا کھیل پیش کریں گے، کچھ ماہ سے کرکٹ کھیلنا نقصان دہ نہیں ہوگا۔ ٹیسٹ کرکٹ میں واپسی صرف دورہ انگلینڈ کے لیے ہے۔

ایک سوال کے جواب میں فاسٹ باؤلر کا کہنا تھا کہ گیند پر تھوک لگانے کی پابندی سے کوئی فرق نہیں پڑے گا، پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے ٹیلیفون کر کے ٹیسٹ میچز کے لیے دستیابی کی بات کی ہے۔

وہاب ریاض کا کہنا تھا کہ بطور متبادل کھلاڑی اگر میری ضرورت پڑی تو قومی ٹیم کی نمائندگی کروں گا کیونکہ میں نے ہمیشہ پاکستان کے لیے کھیلنے کو ترجیح دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایسی صورتحال ہے کہ کوئی بھی کھلاڑی واپس نہیں آسکتا اور میں ایسی صورتحال میں پی سی بی کا ساتھ دینے کے لیے تیار ہوں، ہمیں نوجوان کھلاڑیوں کو سپورٹ کرنا ہوگا۔

وہاب ریاض نے کہا کہ انگلینڈ کا دورہ بہت غیر معمولی صورتحال میں ہو رہا ہے، ہم نے گھر میں رہ کر بھرپور پریکٹس کی ہے اور اگر سینٹرل کنٹریکٹ نہیں ملا تو کوئی فرق نہیں پڑتا، میں نے سال پہلے ٹیسٹ کرکٹ سے بریک لی تھی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ یہ ‏فیصلہ اپنی گزشتہ کارکردگی کو سامنے رکھ کر کیا ہے تاہم محدود اوورز کی کرکٹ کھیلتا رہوں گا، اس سے مجھے اپنی فٹنس جانچنے کا موقع بھی ملے گا۔