مودی سرکار مجھے جیل بھیجنے کی تیاری کر رہی ہے، کنگنا رناوت

ممبئی: بالی ووڈ اداکارہ کنگنا رناوت نے الزام عائد کیا ہے کہ مودی سرکار انہیں جیل بھیجنے کی تیاری کررہی ہے۔
بالی ووڈ میں اقربا پروری کے خلاف آواز بلند کرنے والی اداکارہ کنگنا رناوت نے عامر خان کے ایک بیان پر شدید تنقید کی جس میں مسٹر پرفیکشنسٹ نے کہا تھا کہ ملک میں بڑھتی عدم برداشت نے انہیں خوفزدہ کردیا ہے حتٰی کہ اکثر ان کی اہلیہ بھی ملک چھوڑنے کا مشورہ دیتی رہتی ہیں کیوں کہ انہیں ہر وقت بچوں کی جان کا خطرہ لاحق رہتا ہے۔

کنگنا رناوت نے عامر خان کے اس بیان پر ان کی اہلیہ کو اڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ موم بتی کے ساتھ احتجاج کرنے والے گینگ دیکھو کہ فاشسٹ لوگوں کے خلاف آواز اُٹھانے والوں کے ساتھ کیا ہوتا ہے لیکن میں آپ لوگوں کی طرح موم بتی ہاتھ میں لیکر احتجاج کرنے والی نہیں ہوں، مجھے دیکھیں میں مہاراشٹرا کی فاشسٹ حکومت کے ساتھ لڑ رہی ہوں۔

کنگنا نے کہا کہ میں سوارکا، نیٹا باس اور جھانسی کی رانی جیسے لوگوں کی پیروی کرتی ہوں، جیسا تاریخ میں رانی لکشمی بائی کا قلعہ توڑا گیا تھا اسی طرح میرا گھر بھی توڑا گیا، جیسے سوارکا کو ظالم حکومت کے خلاف بغاوت کرنے پر جیل بھیجا گیا ٹھیک اسی طرح مجھے بھی جیل بھیجنے کی تیاری کی جارہی ہے، میں یہ کہنا چاہتی ہوں کہ کوئی عدم برداشت کے گینگ سے جا کر پوچھے کہ اس عدم برداشت کے ملک میں آج تک انہوں نے کتنے ظلم سہے ہیں؟۔

اداکارہ کا کہنا تھا کہ میں آج واضح طور پر بتا دینا چاہتی ہوں کہ مودی سرکار مجھے جیل بھیجنے کی کوشش کر رہی ہے اور یہ بات مجھے مزید پر اعتماد بنا رہی ہے، حتٰی کہ میں خود کو بہت جلد جیل میں دیکھنا بھی چاہتی ہوں تاکہ اُن تمام پریشانیوں سے گزر سکوں جن سے میرے آئیڈیل گزر چکے ہیں اور یہ یہی تمام عمل میری زندگی کو ایک مطلب دیں گے۔

واضح رہے کہ علی کاشف نامی ممبی کے وکیل نے کنگنا رناوت کے خلاف ٹوئٹر پر عدلیہ کے خلاف متنازع بیان بازی پر مقدمہ درج کرنے کی درخواست دی تھی جس پر مقامی عدالت نے فوری سماعت کرتے ہوئے اداکارہ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا ہے۔