سینیٹ انتخابات: الیکشن ٹریبونل نے فیصل واوڈا کو طلب کرلیا

کراچی: الیکشن ٹریبونل نے سینیٹ الیکشن کے لیے فیصل واوڈا کے کاغذات نامزدگی کی منظوری کے خلاف درخواست پر وفاقی وزیر سے جواب طلب کرلیا۔ سندھ ہائیکورٹ میں الیکشن ٹریبونل نے سینیٹ الیکشن کے لیے پی ٹی آئی رہنما فیصل واوڈاکےکاغذات نامزدگی کی منظوری کے خلاف اپیل پر سماعت کی۔

درخواست گزار قادر مندوخیل کے وکیل رشید اے رضوی نے دلائل دیے اور وفاقی وزیر فیصل واوڈا کے دہری شہریت رکھنے سے متعلق دستاویزات ٹریبونل میں پیش کیں۔ اس موقع پر جسٹس آغا فیصل نے سوال کیا کہ فیصل واوڈا کی جانب سے کوئی آیا ہے؟ اس پر فیصل واوڈا کے وکیل حسنین چوہان نے بتایا کہ فی الحال مجھےکیس نہیں دیا گیا ہے۔ دورانِ سماعت قادر خان مندوخیل نے کہا کہ فیصل واوڈا نے امریکی شہریت سے متعلق حقائق چھپائے، ریٹرننگ افسرکے سامنے اعتراضات دائر کیے مگر انہوں نے سننے سے انکار کردیا لہٰذا فیصل واوڈاکو سینیٹ الیکشن کے لیے نااہل قرار دیا جائے۔

الیکشن ٹریبونل نے درخواست گزار کے دلائل پر الیکشن کمیشن اور فیصل واوڈاکو نوٹس جاری کرتے ہوئے فریقین سے کل تک جواب طلب کرلیا۔ علاوہ ازیں الیکشن ٹریبونل نے وفاقی وزیر فیصل واوڈاکو پیش ہوکر وضاحت دینے کا بھی حکم دیاہے۔