روس کے بحری جہاز ہائپر سونک ہتھیاروں سے لیس

اسکو: روس کا کہنا ہے کہ روسی بحریہ کے جدید فریگیٹس ہائپر سونک ہتھیاروں سے لیس ہوں گے، ان جہازوں پر زیادہ مقدار میں گولہ بارود ہوگا۔

روسی ملکی شپ بلڈنگ انڈسٹری کے ایک ادارے نے بتایا ہے کہ روسی بحریہ کے جدید پروجیکٹ 22350 فرگیٹ ایڈمرل امیلکو اور ایڈمرل چیچاگوف ہائپر سونک ہتھیاروں کے کیریئر بن جائیں گے اور ہر بحری جہاز 32 کروز میزائل لے جانے کے قابل ہوگا۔

یہ دونوں جہاز، فرگیٹ ایڈمرل آملو اور ایڈمرل چیچاگوف اس سلسلے کے معیاری سیریل تیار کردہ جہازوں کو دیے گئے اہداف کو پورا کرنے کے قابل ہوں گے۔اطلاعات کے مطابق ان جہازوں پر زیادہ مقدار میں گولہ بارود ہوگا، اس کے علاوہ انہیں ہائپر سونک ہتھیاروں سے بھی لیس کیا جا سکے گا۔

خیال رہے کہ گزشتہ برس اکتوبر میں روس نے خوفناک انٹر سیپٹر میزائل کا کامیاب تجربہ کیا تھا۔وزارت دفاع کے مطابق اے بی ایم سسٹم کے نئے انٹر سیپٹر میزائل نے متعدد تجربات میں اپنی صلاحیتوں کو ثابت کیا اور پہلے سے طے شدہ تصوراتی ہدف کو نشانہ بنایا۔

اسی ماہ روس نے نئے ہائپر سونک اینٹی شپ کروز میزائل کا بھی کامیاب تجربہ کیا تھا۔ہائپر سونک میزائل نے برنٹس سمندر میں 450 کلومیٹر کے فاصلے پر اپنے ہدف کو نشانہ بنایا اور ماک 8 کی رفتار کو چھوا جو آواز کی رفتار سے 8 گنا زیادہ ہے۔