روس: ویکسینیشن کے دستاویزات بنانے پر غور شروع

ماسکو: روس نے ویکسین لگوانے والے افراد کے نئے دستاویزات بنانے پر غور شرع کردیا، جو بین الاقوامی سفر میں کام آسکیں گے۔ حکومت بین الاقوامی سفر کرنے والے اور کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین لگوانے والے افراد کے لیے نئی دستاویزات تیار کرنے اور تقسیم کرنے پر غور کر رہی ہے۔سنہ 2020 کے آخر میں روسی حکام کی جانب سے شائع کردہ ہدایت نامے میں روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے پالیسی سازوں کو حکم دیا تھا کہ روسی ویکسین لگائے جانے والے افراد کو سرٹیفکیٹ جاری کرنے پر غور کیا جائے تاکہ شہری بین الاقوامی سفر کے قابل ہوسکیں۔

روس کے وزیر اعظم میخائل مشسٹین کو ان سفارشات پر عمل درآمد کا کام سونپا گیا ہے، وہ 20 جنوری کو اس پر اپنی رپورٹ پیش کریں گے۔دوسری جانب انٹرنیشنل ایئر ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن نے، جو دنیا بھر میں 290 ایئر لائنز کی نمائندگی کرتی ہے ویکسین پاسپورٹ کے خیال کی حمایت کی ہے۔ایسوسی ایشن یہ معلوم کرنے کے لیے اپنا ڈیجیٹل سسٹم تیار کر رہی ہے کہ کس کس نے کرونا وائرس سے بچنے کے لیے ویکسین لگوائی ہے۔

مستقبل میں ہوائی جہازوں میں جانے سے قبل مسافروں سے مساوی دستاویزات پیش کرنے کی توقع کی جاسکتی جس سے ہر مسافر سے ویکسین سرٹیفکٹ یا ویکسین پاسپورٹ بھی طلب کیا جاسکتا ہے۔