امریکی الیکٹورل کالج نے جوبائیڈن کی کامیابی کی تصدیق کردی

واشنگٹن: امریکہ میں الیکٹورل کالج کی سرکاری ووٹنگ مکمل ہونے کے بعد جوبائیڈن کو باضابطہ طور پر فاتح قرار دے دیا گیا ہے، ٹرمپ نے ایک بار پھر جوبائیڈن کو صدر ماننے سے انکار کردیا ہے۔امریکی انتخابات میں الیکٹورل کالج کی سرکاری ووٹنگ مکمل ہونے کے بعد بائیڈن فاتح قرار پائے ہیں، جو بائیڈن نے 306 جبکہ صدر ٹرمپ نے 232 الیکٹورل ووٹ حاصل کئے۔

اس کے علاوہ امریکا کے اٹارنی جنرل ولیم بار نے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے، اپنے استعفے میں ولیم بار نے ٹرمپ کی تعریفوں کے پل باندھ دئیے، اٹارنی جنرل کا کہنا تھا کہ ٹرمپ نے امریکی تاریخ میں مضبوط ترین معیشت کی بنیاد رکھی، صدر ٹرمپ نے مشرق وسطی میں امن معاہدے کرائے اور ٹرمپ نے بروقت کورونا ویکسین کے ذریعے لاکھوں جانیں بچائیں,ڈونلڈ ٹرمپ نے بھی ولیم بار کی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ اٹارنی جنرل نے بہترین خدمات انجام دیں، اٹارنی جنرل کے مستعفی ہونے پر ڈپٹی اٹارنی جنرل جیف روزین قائم مقام اٹارنی جنرل کا عہدہ سنبھالیں گے۔