بغیر پھپھڑوں کے سانس لینے والی لڑکی

لندن:برطانیہ میں ایک انوکھا واقع ڈاکٹر نے 24 سالہ لڑکی شائنسی کی زندگی کو محفوظ بنا لیا ،بغیر پھپھڑوں کے سانس لینے والی لڑکی جو کہ بوکس میں رکھ کر گھوم رہی ہیں۔
خبر کے مطابق سامنے آیا ہے کہ 24سالہ لڑکی کے پھپڑے ایک بیماری کی وجہ سے ختم ہو گئے تھے،ڈاکٹر نے دن رات ایک کر کے لڑکی کی جان بچا لی اور وہ اپنے مقصد میں کامیاب ہو گئے ڈاکٹرز نے ٹرانسپلانٹ کر کے ’اوسی ایس‘ باکس میں رکھے ہوئے پھپھڑوں کی مدد سے لڑکی کی سانس کو مصنوعی طریقے سے بحال کر دیا۔
مزید تفصیلات کے مطابق خاتون کا کہنا تھا کہ وہ اس سے قبل چار اسپتال چکر لگا چکی تھیں جہاں ڈاکٹرز نے انہیں جواب دے دیا تھا، بعد ازاں وہ ماریوس برمن نامی سرجن کے پاس نومبر 2018 میں پہنچیں جنہوں نے کچھ امید دلائی،ڈاکٹر کا ٹرانسپلانٹ والا یہ تجربہ کامیاب رہا اور شائنسی اب ان ہی پھپھڑوں کی مدد سے سانس بھی لے رہی ہے اور اپنی زندگی خوشی سے گزار رہی ہیں۔

Read Previous

نیوز ھیڈلایئنز آف 10 PM

Read Next

کرنٹ افئیرز 12 جنوری 2020

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *